روپے کی خراب صورت حال کو مزید خراب کرتے ہوے وفاقی وزراہ نے واویلا مچانا شروع کر دیا

پاکستان میں روپے کی خراب صورت حال کو مزید خراب کرتے ہوے وفاقی وزراہ نے واویلا مچانا شروع کر دیا ہے

وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری کاکہنا ہےکہ معیشت کے حوالے سے سخت فیصلے لیے ہیں اور آئی ایم ایف کے پاس جانا نہیں چاہتے تھے لیکن 28 ارب ڈالر اس سال ملک کو چلانے کے لیے چاہئیں۔

پاکستان کنگھال: ڈالر 155 پر جانے کی توقع

انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف کے پاس جانا نہیں چاہتے تھے، یہ ہماری پالیسی نہیں تھی لیکن ایک ماہ 16 دن کے ذخائر رہ گئے ہیں، قرضہ 28 ہزار ارب پر چلا گیا ہے، ملک کو اپنے قدموں پر کھڑا کرنا ہے، 8 ارب ڈالر قرضوں کی مد میں ادا کرنے ہیں اور 28 ارب ڈالر اس سال ملک کو چلانے کے لیے چاہئیں۔

وفاقی وزیر پورٹس علی زیدی کا کہنا ہے کہ انہوں نے سنا ہے ڈالر 140 تک جائے گا۔ انٹر بینک میں آج ہونے والے ڈالر کے اضافے پر تبصرہ کرتے ہوئے انہوں نے ڈالر مزید مہنگا ہونے کا امکان ظاہرکر دیا۔