بھارت کے ساتھ لڑائی نہیں اچھے تعلقات چاہتے ہیں

اسلام آباد (اردو ورلڈ نیوز) تحریک انصاف کے رہنما چودھری سرور نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں ظلم کیا جارہا ہے ، بھارت کے ساتھ لڑائی نہیں اچھے تعلقات چاہتے ہیں۔

شرم آنی چاہیے اس بہروپیے کو

جیونیوز کے پروگرام ”کیپٹل ٹاک“ میں گفتگو کرتے ہوئے چودھری سرور نے کہا کہ ہم بھارت کے ساتھ لڑائی نہیں بلکہ اچھے تعلقات چاہتے ہیں۔ مقبوضہ کشمیر میں ظلم کیا جا رہا ہے

پہلے چیف جسٹس کے خلاف ریفرنس کا فیصلہ کیا جاۓ

انہوں نے کہا کہ 2013 کے الیکشن کے بعد عمران خان نے کہا کہ چار حلقے کھول دو اور چار حلقے کھولنے میں چار سال لگ گئے لیکن ہم اب کہہ رہے ہیں آپ جہاں کہتے ہیں ہم حلقہ کھولنے کے لئے تیار ہیں

اگرہم کو کوئی ڈر ہوتا تو ہم یہ بات نہ کرتے ۔ بین الاقوامی مبصرین نے مجھے پیغام بھیجا ہے کہ الیکشن میں دھاندلی نہیں ہوئی ۔

لڑکی کے فارم 45 مانگنے پر فوجی نے کون سی گھناؤنی بات کہی؟

انہوں نے کہا کہ پاکستان کے الیکشن سےمیں نے ایک بات سیکھی ہے کہ حلقہ میں برداری کو دیکھنا پڑتاہے۔

انہوں نے کہا کہ دھاندلی کے حوالے سے جو تحفظات ہیں ان کی تحقیقات ہونی چاہئے اور ہم اس حوالے سے پوری تسلی کرائیں گے ۔

فوج کے نزدیکی چاپلوس شیخ رشید کو وزارت داخلہ دیے جانے کا امکان

انہوں نے کہا کہ عوام سیاسی طور پر بڑے باشعور ہوچکے ہیںاور جو سیاسی جماعتوں کی جانب سے اقدامات کئے جاتے ہیں اس پر گہری نظر رکھتے ہیں۔