نامعلوم افراد نے گل بخاری کو گرفتار کر لیا

پاکستان فوج کے ترجمان جنرل غفور کی صحافیوں پر تنقیدی پریس کانفرنس کے بعد پہلی گرفتاری عمل میں لاتے ہوے صحافی گل بخاری کو نامعلوم افراد نے گرفتار کر لیا

ایک ادارے کی کاروائی میں گل کو کینٹ کے علاقے سےگرفتار کیے جانے کی اطلاعات ہیں

اس گرفتاری پر نواۓ وقت کے نمائندہ گل شیر نے تبصرہ کرتے ہوے کہا کہ

گل بخاری کی گرفتاری وہ بھی بنا کسی جرم کے. یہ سنسرشپ نہیں توکیاہے؟

“معززادارے”کی جانب سےگل بخاری کی گرفتاری بہت سے سوالیہ نشان چھوڑگئی.کیا مادروطن میں زبان بندی فرض سمجھ لی گئی ہے؟؟ کیااپنی زبانیں کٹوالیں اندھی کرلیں یہ آنکھیں؟ کیاآزادی کی سانس لیناجرم بن گیا؟؟ سن لوجس دورمیں جینامشکل ہواسدورمیں جینالازم ہے

گل بخاری وقت ٹی وی میں اپنے پروگرام کے لیے جا رہیں تھیں کہ راستے میں ” نامعلوم ” ویگن سواروں نے ان کی گاڑی روک کر انھیں اپنی گاڑی میں اغوا کر کے لیا گیے

نامعلوم افراد نے گل بخاری کو گرفتار کرنے سے پہلے تشدد کا نشانہ بنایا