عمران خان کا 100 روزہ پلان: مگر کیسے؟

خیبر پختون خواہ کو پیرس بنانے کے بعد عمران خان نے پورے پاکستان کو پیرس بنانے کے لیے منصوبہ پیش کرنے کی ٹھان لی ہے

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان حکومت میں آنے کے بعد 100 دن کا پلان آج پیش کریں گے۔

اسلام آباد کے مقامی ہوٹل میں تحریک انصاف کی جانب سے تقریب کا اہتمام کیا گیا ہے جس میں پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان، جہانگیر ترین، اسد عمر اور شاہ محمود قریشی سمیت دیگر شریک ہیں۔

چیئرمین تحریک انصاف اب سے کچھ دیر بعد حکومت میں آنے کی صورت میں اپنا 100 دن کا پلان پیش کریں گے۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ کراچی میں روزانہ 10 گھنٹے کی لوڈشیڈنگ ہورہی ہے اور شہری بوند بوند پانی کو ترس رہے ہیں جب کہ کراچی میں کوئی کچرا اٹھانے والا نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ فاٹا کا احساس عمران خان سے زیادہ کسی کو نہیں لہذا حکومت میں آتے ہی انگریز کے کالے قانون ایف سی آر کو فی الفور ختم کریں گے۔

ان کا کہنا ہے کہ مولانا فضل الرحمان اور محمود اچکزئی نے حکومت کا ساتھ دیا اور حکومتی حلیفوں نےفاٹا معاملے پر ہمارا ڈیڑھ سال ضائع کیا۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ جنوبی پنجاب کو الگ صوبہ بنائیں گے

عمران خان کے ١٠٠ دنوں کے پلان پر سوشل میڈیا پر مختلف تبصرے بھی کیے جا رہے ہیں

عمران خان کے 100 روزہ پلان پر تبصرہ کرتے ہوے وجہی ثانی نے کہا کہ ” سو روزہ پلان ایک نا اہل رہنماجہانگیر ترین زرعی اصلاحات کے منصوبے بتا رہا ہے۔”

سوشل میڈیا صارف نوشی جی کے مطابق ” بندہ پوچھےجو شخص خود کسی کے پلان پر چل رہا ہے اسکا پلان کیا ہوسکتا ہے”

عثمان مغل نے سوال پوچھا کہ ” اسد عمر بھائ 1 کروڑ نوکریوں ک اعلان تو کردیا، بتانا پسند فرمائیں گے کہ کے پی کے میں پچھلے 5 سالوں میں کتنی نوکریاں پیدا کی ہیں؟”

ٹویٹر صارف انوشہ نے لکھا کہ ” جھوٹے ، نقالو ، دھوکے باز اور فراڈیوں سے ہوشیار ہوشیار ہوشیار  5 سال میں تو کے پی کے کی حالت نہیں بدل سکے اور 100 دن میں پاکستان کی حالت بدلے گے ہاہاہاہاہاہا
عمران خان کچھ شرم کرو ، کچھ حیا کرو ”

سوشل میڈیا صارف عاصمہ آصف نے لکھا کہ

”تو مطلب صاف هے کے شفاف الیکشن کا چناو هو گیا هے
سو دن کا پلان بھی اگیا هے
پهر الیکشن کا ٹوپی درامه کس لیے
اعلان کر دیں عمران اگلا وزیراعظم هے
اسٹیبلشمنٹ اسکے ساتھ هے
لوگ گھروں مین رہیں
پارٹی کا نیا لوگو بیٹ پر فوجی ٹوپی
اور پی ٹی ا اسٹیبلشمنٹ مین ضم هو گئی هے PTIE
سو دن کے اندر پاکستان کرپشن فری هو جاےگا62/63کے تحت لوگ اسمبلیوں کے لے چنے گے ہیں
اور یہ سب کچھ عمران کو منظور هوگا
یہ دھاندلی نہیں ھوگی?
”الله کی پناه!
محمّد طیب چودھری نے تبصرہ کیا کہ
”جھوٹ اور فریب سے بھرپور فلم”