بیس سال پہلے سڑک چوڑی کیوں بنوائی؟ نیب تعطیل کے دن عدالت پہنچ گئی

نواز شریف آج نیب لاہور میں پیش نہیں ہوئے

آج سے بیس سال پہلے رائے ونڈ سے جاتی امرا تک تنگ سڑک کی بجاۓ چوڑی سڑک بنوانے پر نیب نواز شریف سے انکوائری کرنا چاہتی ہے

نیب کی تین رکنی جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم اس کیس میں اتنی بیتاب ہے کہ تعطیل ہونے کے باوجود نیب لاہور کی عدالت میں نواز شریف کا انتظار کرتی رہی

کیس میں نیب کا موقف ہے کہ نوازشریف نے بطور وزیراعظم 1998 میں اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے جاتی امرا تک سڑک تعمیر کروائی اور انہی کے حکم پر سڑک کی چوڑائی 20 فٹ سے 24 فٹ کی گئی جس سے لاگت بڑھ گئی اور قومی خزانے کو نقصان پہنچا

جہاں ایک طرف نیب کو یہ کیس بیس سال بعد یاد آیا وہیں دوسری طرف عوام یہ سوچنے پر مجبور ہیں کہ تنگ سڑک کو چوڑا بنوانا ایک اچھی بات ہے نہ کہ گناہ اور لاہور میں بنی یہ چوڑی سڑک پاکستان کے عوام ہی استعمال کر رہے ہیں نہ کہ انڈیا کے عوام