عمران خان والی ایمپائر کی انگلی کس کی تھی؟

عمران خان ٢٠١٤ کے دھرنے میں جس ایمپائر کی انگلی کے کھڑا ھونے کا انتظار کر رہے تھے اس شحص کا نام “جنرل ظہیر السلام” ہے

جنرل ظہیر السلام اس وقت پاکستان کی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کے چیف تھے

یاد رہے کہ ٢٠١٤ کے دھرنے میں عمران خان دن رات سابق وزیر اعظم نواز شریف کے استعفے کے مطالبہ کرتے رہتے اور ایمپائر کی انگلی سے ڈراتے رہتے تھے

لیکن اب انکشاف ہوا ہے کہ اس دھرنے کے پیچھے بھی فوج کا ہاتھ تھا

یاد رہے کہ اس کے ساتھ سپریم کورٹ میں ایک مقدمہ سابق آرمی چیف اور سابق سربراہ آئی ایس آئی پر بھی چل رہا ہے

بدقسمتی سےہم دھرنےمیں استعمال ہوگئے

جس میں انہوں نے بینظیر بھٹو کی حکومت گرانے کے لیے مختلف سیاستدانوں کو رقم دی

ذرا یہ ویڈیو ملاحظہ فرمائیں۔۔